Fariha PervezGeo TVMehwish HayatPakistani Dramas OST Mp3

Mirat ul Uroos OST Mp3 Download Full Song

Listen And Download Online Official Title Song Of GEO TV Drama Serial “Mirat ul Uroos” Full HD Quality. Finally, You Are Here To Download Mirat ul Uroos OST Song In Mp3 Of Fariha Ft Mehwish Hayat. We Are Share With You Mirat ul Uroos OST Song Download Mp3 Of 2021 With Fast Downloading Links. Fariha Ft Mehwish Hayat Mirat ul Uroos OST Mp3 Download Song With High-Quality Sound 320kbps. In My Point Of View, You Will Be Really Like And Download Fariha Ft Mehwish Hayat New Song Mirat ul Uroos OST Mp3 Download 320kbps.

Mirat ul Uroos OST Song voice of Fariha Ft Mehwish Hayat Qawwal.

How Can I Download Mirat ul Uroos MP3 Song?

This Is a Very Simple Methods For All Users We Don’t Convert It Into a Difficult Process. You Can Download Mirat ul Uroos Song Mp3 In Your Mobile Phones With These Simple Steps. Just You Go Little Below And Check Download Button. Press Download Song Mp3 Button And Wait For Downloading Processing.

We Have Also Huge Collections Of All the Latest Pakistani OST Mp3 Songs Of All Channels Such As Geo TV, Hum TV, Express TV, Bol TV, ARY Digital TV, TVone TV, PTV, Geo Kahani TV, And A-Plus TV.

Thanks For Visiting Don’t Forget To Share the Fariha Ft Mehwish Hayat Song With Your Friends And Family Members.

Play Online Audio Button

Mirat ul Uroos OST Mp3 Download Button

download button

Mirat ul Uroos OST Video

Mirat ul Uroos Drama OST Lyrics

میرا ایک چھوٹا سا سپنا ہے
جسے پل میں پورا کر دے گا
ان آتی جاتی سانسوں میں
وہ خوشبو کوئی بھر دے گا
مجھے اونچی ہواوُں میں اڑنا ہے
اور امبر کو جا چھونا ہے
سونا ہے یار کے بستر پر
پھر ہر ایک خواہش میں جگنا ہے
جب چاہوں گھوموں بگھیا میں
میں تتلی ہوں مجھے پر دیتا
وہاں کیسے چیں ملے مجھ کو
جہاں قدم قدم پر پہرے ہوں
دم گھٹتا ہوجہاں رہتے ہوئے
جہاں غم کے سائے گہرے ہوں
جومنزل پر لے جائے گی
وہ مجھ کو ایسی ڈگر دے گا
میں چلتے چلتے تھک بھی گئی
اور منزل ہاتھ نہیں آئی
خود اپنے سپنے تور لیئے
اور سکھ کی رات نہیں آئی
اب آکے ہوا مجھے انداذہ
میرا ساتھ وہ ذندگی بھر دے گا
کیوں حد سے گزری وحشت میں
اسے دھیرے دھیرے کیوں نہ چھوا
کیوں سارے ناتے ٹوٹ گئے
بھری بھول ہوئی احساس ہوا
جب ٹوٹے لمحے جوڑوں گی
مجھے جینے کی وہ خبر دے گا
میرا چھوٹا سا اک سپنا ہے
جسے پل میں پورا کردے گا
ان آتی جاتی سانسوں میں
وہ خوشبو کوئی بھر دے گا

Related Articles

Leave a Reply

Back to top button